Digital Forensic, Research and Analytics Center

جمعہ, جنوری 27, 2023
spot_imgspot_imgspot_imgspot_img

Popular Posts

Latest

تلنگانہ کے وزیراعلیٰ کے سی آر کا پرانا ویڈیو وائرل؟ پڑھیں-فیکٹ چیک

تلنگانہ کے وزیراعلیٰ کلواکُنتلا چندر شیکھر راؤ (کے سی آر) کے حوالے سے سوشل میڈیا سائٹس پر ایک ویڈیو وائرل ہو رہا ہے۔ سوشل میڈیا یوزرس اس ویڈیو کو شیئر کر رہے ہیں اور ان کا مذاق اڑا رہے ہیں کہ ان کی بیٹی کا نام دہلی شراب آبکاری گھپلے میں آنے کے بعد کَینری کی طرح گایا جائے۔ 

ویڈیو کو شیئر کرتے ہوئے پریتی گاندھی نامی ایک ویریفائیڈ یوزر نے کیپشن دیا،’دہلی شراب آبکاری گھپلے میں اپنی بیٹی کا نام آنے کے بعد کے سی آر اچانک کَینری کی طرح گا رہے ہیں!‘ 

Source Twitter

اس دوران دیگر سوشل میڈیا یوزرس بھی اسی طرح کے دعوے کے ساتھ ویڈیو شیئر کر رہے ہیں۔

Source Twitter

سوشل میڈیا سائٹس پر شیئر کی گئی 30 سیکنڈ کے ویڈیو میں بھارت راشٹرا سمیتی کے سپریمو کے سی آر کو یہ کہتے ہوئے دکھایا گیا ہے کہ وہ پی ایم مودی کے ’اچھے دوست ہیں‘ جسے بھارتیہ جنتا پارٹی کی پریتی گاندھی نے ٹویٹر پر شیئر کیا تھا۔ ان کی بیٹی کا نام دِلّی لیکر آبکاری محکمے میں ٓایا ہے۔ 

ای ڈی کے مطابق، کے چندر شیکھر راؤ کی بیٹی کے کویتا، ایک ایم ایل سی اور ایک سابق رکن پارلیمنٹ کا نام مبینہ دہلی آبکاری پالیسی گھپلے کے سلسلے میں ریمانڈ رپورٹ میں تھا۔ کویتا اور دو دیگر نے عام آدمی پارٹی (اے اے پی) کو 100 کروڑ روپیے کی ادائیگی کی تاکہ اب ختم ہو چکی دہلی آبکاری پالیسی کے فوائد میں تعاون کیا جا سکے۔ 

فیکٹ چیک:

وائرل دعوے کی حقیقت جاننے کے لیے DFRAC کی ٹیم نے KCR کے بارے میں ایک سمپل کی-ورڈ سرچ کیا، ٹیم کو NTV Telugu  کا ایک آفیشییل یوٹیوب چینل ملا۔ ویڈیو 03 مارچ 2018 کو اس سرخی کے ساتھ اپلوڈ کیا گیا تھا۔’پی ایم نریندر مودی میرے دوست ہیں، سی ایم کے سی آر کہتے ہیں، میرا مودی کے ساتھ کوئی تنازعہ نہیں ہے۔ NTV

Source YouTube

وہیں، ہمیں Xplorer India نامی ایک اور یوٹیوب چینل ملا، جس میں کے سی آر کو یہ کہتے ہوئے سنا جا سکتا ہے کہ ’میرے پاس نریندر مودی کے خلاف کچھ نہیں ہے اور ان کے لیے میرے دل میں ان کے لیے احترام ہے۔ میں ان کا سب سے اچھا دوست ہوں۔ انہوں نے آگے کہا کہ وہ محض ’ملک کی سست رفتار ترقی‘ کے خلاف ہیں۔ 

Source YouTube

مزید سرچ کرنے پر ٹیم نے پایا کہ کئی میڈیا ہاؤسز نے سنہ 2018 میں اسے کور کیا ہے۔

Source ap7am
Source timesofindia

KCR کا ویڈیو 4 سال سے زیادہ پرانا ہے۔ اس لیے، یہ ویڈیو KCR کی بیٹی کویتا کے مبینہ دہلی پالیسی آبکاری گھپلے میں ملوث ہونے سے متعلق نہیں ہے۔

نتیجہ:

DFRAC کے فیکٹ چیک سے یہ واضح ہے کہ بھارتیہ جنتا پارٹی کی رکن پریتی گاندھی کی جانب سے شیئر کیا گیا وائرل ویڈیو چار سال سے زیادہ پرانا ہے، اس لیے متذکرہ دعویٰ گمراہ کن ہے۔