Digital Forensic, Research and Analytics Center

پیر, نومبر 28, 2022
spot_imgspot_imgspot_imgspot_img

Popular Posts

Latest

ہندو تنظیموں نے اسکولوں میں دعا کے بجائے ’ہندو بھجن‘ گانے کا مطالبہ؟ پڑھیں، فیکٹ چیک

سوشل میڈیا اکاؤنٹ، مرصد مسلمي الهند (@India__Muslim) مسلسل ہندوستان...

دہلی میں دو مسلمانوں نے ایک ہندو لڑکے کو کیا قتل؟ پڑھیں، فیکٹ چیک 

سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو تیزی سے وائرل ہو...

کیا پاکستان نےکیا بلوچستان کے خلاف اعلان جنگ؟ پڑھیں، فیکٹ چیک 

پاکستان اور بلوچستان کے مابین جنگ کے حوالے سے...

فیکٹ چیک: کیا  حکومتِ ہند 3000 مساجد کو منہدم کرنے کا منصوبہ بنا رہی ہے؟

سوشل میڈیا پر ایک دعویٰ وائرل ہو رہا ہے...

فیکٹ چیک: ناروے کے سفیر نے شیئر کیا بھارت سے متعلق فیک ویڈیو

ناروے کے سفیر اور سابق سیاست داں ایرک سولہیم نے ٹویٹر پر ایک ویڈیو شیئر کیا ہے، جس میں متعدد گاڑیوں کو پانی میں ڈوبی ہوئی سڑک پار کرتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے۔ انہوں نے دعویٰ کیا ہے کہ یہ ویڈیو انڈیا کا ہے۔ 

Source: Twitter

انہوں نے ٹویٹ میں لکھا،’بے مثال بھارت! آخر کار مجھے سب سے خوبصورت واٹر ہائی وے کا سامنا کرنا پڑا‘۔

فیکٹ چیک:

ایرک سولہیم کے دعوے کی پڑتال کے لیے، DFRAC ٹیم نے InVID ٹول کا استعمال کرتے ہوئے ویڈیو کو متعدد کی-فریم میں تبدیل کیا۔ ٹیم نے کی-فریم کو ریورس امیج سرچ کیا۔ اس دوران ٹیم کو reddit پر ایک ایسا ہی ویڈیو ملا۔ یہاں ویڈیو کے بارے میں بتایا گیا کہ یہ ویڈیو چین کے Yongxiu Wucheng کا ہے۔

مزید سرچ کرنے پر ٹیم کو چین کے سرکاری میڈیا کے ٹویٹر اکاؤنٹ ’بیوٹی فل چائنا‘ پر ایک اور اسی طرح کا ویڈیو ملا؛ جس میں ویڈیو کے بارے میں معلومات دیتے ہوئے بتایا گیا کہ ای چین کے شہر جیانگ شی میں ’سڑک کے نیچے پانی‘ پر ڈرائیو کریں! Yongxiu-Wucheng روڈ کا ایک حصہ سیلاب کے موسم میں پانی میں ڈوب جاتا ہے… جب پانی کی سطح 18.67 میٹر سے تجاوز کر جاتی ہے #AmazingChina۔

نتیجہ:

ہمارے فیکٹ چیک سے یہ واضح ہے کہ وائرل ویڈیو گمراہ کن ہےکیونکہ یہ بھارت کا نہیں بلکہ چین کا ہے۔